توشہ خانہ ریفرنس: نواز ، زرداری اور گیلانی احتساب عدالت میں طلب

(آئی این این نیوز)
رپورٹ: اقبال چوہدری

رضا گیلانی اور سابق صدر آصف علی زرداری کو طلب کر لیا۔

احتساب عدالت نے نواز شریف، یوسف رضا گیلانی اور آصف علی زرداری کو توشہ خانہ ریفرنس میں 29 مئی کو طلب کیا ہے۔

قومی احتساب بیورو (نیب) کے مطابق آصف زرداری اور نواز شریف نے یوسف رضا گیلانی سے غیر قانونی طور پر گاڑیاں حاصل کیں، آصف زرداری نے گاڑیوں کی صرف 15 فیصد ادائیگی جعلی اکاؤنٹس کے ذریعے کی۔

نیب کے مطابق لیبیا اور یو اے ای سے بھی آصف زرداری کو بطور صدر گاڑیاں تحفے میں ملیں، آصف زرداری نے گاڑیاں توشہ خانہ میں جمع کرانے کے بجائے خود استعمال کیں۔

بیورو نے نواز شریف پر الزام عائد کیا ہے کہ نواز شریف 2008 میں کسی بھی عہدے پر نہیں تھے لیکن نواز شریف کو 2008 میں بغیر کوئی درخواست دیے توشہ خانے سے گاڑی دی گئی۔

نیب حکام کے مطابق گاڑیوں کی ادائیگی عبدالغنی مجید نے جعلی اکاؤنٹس سے کی، انور مجید نے انصاری شوگر ملز کے اکاؤنٹس سے دو کروڑ روپے سے زائد کی غیر قانونی ٹرانزیکشنز کیں۔

نیب کا یہ بھی کہنا ہے کہ انور مجید نے آصف زرداری کے اکاؤنٹس میں بھی 9 اعشاریہ 2 ملین روپے منتقل کیے جب کہ عبدالغنی مجید نے 37 ملین روپے کسٹم کلیکٹر اسلام آباد کو ٹرانسفر کیے۔

قومی احتساب بیورو کا کہنا ہے کہ ملزمان نیب آرڈیننس کی سیکشن 9 اے کی ذیلی دفعہ 2، 4، 7 اور 12 کے تحت کرپشن کے مرتکب ہوئے۔