لاک ڈاؤن کے حوالے سے پالیسی واضح تھی، وزیر اعظم

(آئی این این نیوز)

وزیر اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ لا ک ڈاؤن کے حوالے سے ہماری پالیسی بالکل واضح تھی، کورونا وائرس کے بعد لاک ڈاؤن سے متعلق صوبوں نے خود سے اقدامات کیے، ہمارے پاس دہری مشکل ہے، ہم نے ایک طرف کورونا اور دوسری طرف بھوک سے بچنا ہے۔

قومی اسمبلی کے اجلاس میں اظہار خیال کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ 31 جنوری سے ٹڈی دل پر ایمرجنسی لگا رکھی ہے، این ڈی ایم اے کو ٹڈی دل پر خرچ کا مکمل اختیار ہے، جبکہ ٹڈی دل پاکستان کے لئے خطرناک ہو سکتا ہے۔

وزیراعظم نے کہا کہ کورونا کی وجہ سے برطانیہ سے سپلائی رک گئی، ٹڈی سے متعلق کئی چیزیں ہمارے ہاتھ میں نہیں ہیں، پوری قوم مل کر ٹڈی دل کا مقابلہ کرے گی۔

عمران خان نے کہا کہ پاکستان میں کچی آبادیاں، غریب بستیاں ہیں، مودی نے لاک ڈاؤن ہمارے بعد کیا، جبکہ ہم نے ملک میں کورونا کے 26 کیسز آنے پر ایکشن لیا، ہم نے 13 مارچ کو لاک ڈاؤن کیا، اس کے بعد سے میرا ایک بیان دکھا دیں جس میں تضاد ہو۔

انہوں نے کہا کہ میرے بیانات میں مستقل مزاجی ر ہی ہے، لاک ڈاؤن کے حوالے سے ہماری پالیسی بالکل واضح تھی، بھارت میں لاک ڈاؤن سے تباہی ہوئی، غریب کچلا گیا، جبکہ بھارت میں کورونا وائرس کا پھیلاؤ پاکستان سے زیادہ ہے۔