انگریزی نہ آنے کی وجہ سے میگزین انٹرویو سے بھاگ گیا تھا، دلجیت دوسانجھ

(آئی این این نیوز)

بھارتی اداکار و گلوکار دلجیت دوسانجھ نے پنجابی فلموں کے بعد بالی وڈ میں ابھی اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوایا ہے اور انہیں کنگ آف پنجابی فلمز بھی کہا جاتا ہے۔

پنجاب کے دیہی پس منظر سے تعلق رکھنے والے دلجیت نے ایک انٹرویو میں بتایا  کہ انہیں انگریزی نہیں آتی،سیکھنے کی کوشش بھی کی لیکن کامیاب نہ ہو سکے۔

دلجیت نے بتایا کہ انگریزی کی وجہ سے وہ  اپنی بالی وڈ  فلم ‘گڈ نیوز’ کے متعلق عالمی شہرت یافتہ معروف میگزین ‘ووگ’کو انٹرویو نہیں دے سکے۔

انہوں نے بتایا کہ انہیں فوٹو شوٹ کے لیے لندن بلایا  گیا تھا تو میں حیران تھا کہ فوٹو شوٹ تو کہیں بھی ہوسکتا تھا، پھر یہ اتنا خرچہ کیوں کررہے ہیں؟ فوٹو شوٹ کے بعد وہاں ایک میڈم انگریزی میں انٹرویو لے رہی تھیں تو میں خاموشی سے وہاں سے ‘کٹ لیا’۔

بعدازاں ووگ میگزین کے سرورق پر کرینہ کپور، کرن جوہر اور نتاشاپونا والا کے ساتھ ان کی تصویر بھی شائع ہوئی تاہم ان کا انٹرویو موجود نہیں تھا۔

ایک اور انٹرویو میں دلجيت دوسانجھ کا کہنا تھاکہ وہ فلم تو چھوڑ سکتے ہیں لیکن پگڑی نہیں۔